پشاور دھماکہ۔۔۔ پنجاب میں بھی سیکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کا حکم

آئی جی پنجاب انعام غنی نے آر پی اوز اور ڈی پی اوز کو حساس مقامات، عبادت گاہوں اور عوامی مقامات کی سیکیورٹی بڑھانے کی ہدایت کر دی

109

پشاور دھماکے کے بعد آئی جی پنجاب نے صوبے میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کرنے کا حکم دیا ہے۔تفصیلات کے مطابق آئی جی پنجاب انعام غنی نے پشاور دھماکے کے تناظر میں صوبے میں سیکیورٹی الرٹ کرنے کا حکم دیا ہے۔

 

آئی جی پنجاب انعام غنی نے آر پی اوز اور ڈی پی اوز کو حساس مقامات، عبادت گاہوں اور عوامی مقامات کی سیکیورٹی بڑھانے کی ہدایت کر دی ہے۔

 

آئی جی پنجاب نے کہا کہ ڈی پی اوز سمیت دیگر افسران خود فیلڈ میں نکل کر سیکیورٹی انتظامات کا جائزہ لیں۔بین الصوبائی اور بین الاضلائی چیک پوسٹوں پر چیکنگ کا عمل موثر بنایا جائے،

 

انہوں نے ڈولفن اور پیرو فورسز کے گشت کے اوقات کار بڑھانے کی ہدایت کی ہے۔انہوں نے کہا کہ تمام اضلاع میں سرچ ، سوئپ اور انٹیلی جسن بیسڈ آپریشنز میں مزید تیزی لائی جائے۔

 

یہ بھی پڑھیں: سعودی عرب کا فرانس میں توہین آمیز کارٹونز کی اشاعت پر ردِعمل

 

واضح رہے کہ آج صبح پشاور میں ایک افسوسناک واقعہ پیش ٰآیا جہاں پشاور کے علاقے دیرکالونی میں دھماکے سے 7 بچے شہید اور70 زخمی ہوگئے، زخمیوں میں زیادہ تعدد بچوں کی ہے ،

 

جن کی عمریں 11 سے17 سال کے درمیان ہیں۔ایس ایس پی آپریشنز نے واقعے کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ ایک شخص سرخ رنگ کا بیگ لے کر مدرسے میں داخل ہوا۔نامعلوم شخص کے مدرسے میں داخل ہوتے ہی دھماکہ ہو گیا۔

 

مدرسے میں داخل ہونے والے شخص کی تلاش جاری ہے جب کہ پولیس حکام نے مزید بتایا ہے کہ دھماکہ آیی ای سے کیا گیا۔یہ دیسی ساختہ بم تھا ٹائم ڈیوائس بھی نصب تھی۔ ۔

 

پولیس کے مطابق دھماکہ بچوں کے مدرسے کے قریب ہوا ، جہاں 100سے زائد بچے تعلیم حاصل کر رہے تھے ، بم ناکارہ بنانے والی ٹیم اور ریسکیو اہلکاروں کی بڑی تعداد مدرسے میں پہنچ گئی ،

 

جب کہ علاقے کو فوری طور سیل کر دیا گیا ، زخمیوں کی زیادہ تعداد کو لیڈی ریڈنگ ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں زیادہ تر کے سروں میں چوٹیں آئی ہیں جس کی وجہ سے ان کی حالت نازک بتائی گئی ہے۔

 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

Optimized with PageSpeed Ninja